38

دہری شہریت چھپانےکامعاملہ،فیصل واوڈا کی مشکلات میں اضافہ

اسلام آباد،(بےلاگ نیوز) اسلام آباد ہائی کورٹ نے دہری شہریت چھپانے پر نا اہلی کے لیے دائر درخواست پر وفاقی وزیر فیصل واوڈا، الیکشن کمیشن اور دیگر کو نوٹس جاری کر دیا۔

اسلام آباد ہائیکورٹ کے جسٹس عامر فاروق پر مشتمل بنچ نے شہری میاں محمد فیصل کی جانب سے فیصل واوڈا کے خلاف دہری شہریت چھپانے سے متعلق درخواست کی سماعت کی، درخواست گزار کے وکیل کا کہنا تھا کہ فیصل واوڈا نے الیکشن کمیشن میں دوہری شہریت کے حوالے سے جھوٹا حلف نامہ جمع کرایا،جسٹس عامر فاروق نے استفسار کیا کہ الیکشن کمیشن میں نامزدگی فارم جمع کرانے کی آخری تاریخ کیا تھی۔

 وکیل کا کہنا تھا کہ نامزدگی فارمز جمع کرانے کی آخری تاریخ 11 جون تھی،وکیل نے 11 جون کو جمع کرایا گیا حلف نامہ عدالت کے سامنے پڑھا جس پر جسٹس عامر نے ریمارکس دیئے کہ کیا الیکشن کمیشن میں جو حلف نامہ جمع کرایا گیا وہ درست نہیں تھا،وکیل کا کہنا تھا کہ فیصل واوڈا نے الیکشن کمیشن میں جھوٹا حلف نامہ جمع کرایا، فیصل واوڈا نامزدگی فارمز جمع کراتے ہوئے دوہری شہریت رکھتے تھے، سپریم کورٹ کے فیصلے کے مطابق فیصل واوڈا کو دوہری شہریت چھوڑ کر نامزدگی فارم جمع کرانا تھا۔ اسلام آباد ہائیکورٹ نے الیکشن کمیشن سمیت دیگر فریقین کو جواب جمع کرانے کا نوٹس جاری کرتے ہوئے سماعت 24 فروری تک ملتوی کر دی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں