189

پاکستانی تاریخ کی سب سے بڑی پلی بارگین کا معاملہ لٹک گیا

اسلام آباد،(بےلاگ نیوز)پاکستان اور نیب کی تاریخ میں سب سے بڑی پلی بارگین کا معاملہ تعطل کا شکارہوگیا۔

ذرائع کے مطابق پراپرٹی ٹائیکون ملک ریاض کے داماد نے نیب میں چار درخواستیں دی ہیں جس میں پلی بارگین کی استدعا ہے،ذرائع کا کہنا ہے کہ ان کیسز میں بحریہ آئیکون ٹاور، گالف سٹی مری، پنک ریزیڈینسی اور بحریہ ٹاؤن راولپنڈی شامل ہیں،نیب ان کیسوں اور ان سے جڑی املاک کی مالیت پچاس ارب روپے قرار دے چکا ہے مگر ابھی معاملات میں تعطل آگیا ہے اور اس کی وجہ دونوں اطراف اپنی شرائط پر قائم ہونا ہے۔

یہی تعطل ان کیسز میں سے اہم ترین بحریہ آیئکون ٹاور میں ملک ریاض سمیت 15 ملزمان کی طلبی کا سبب بنا،13فروری کو احتساب عدالت اسلام آباد نے ملک ریاض انکے داماد زین ملک، سابق سینیٹر ڈاکٹر ڈنشا، لیاقت قائم خانی جیسے بڑے ملزمان شامل ہیں،ذرائع کے مطابق معاملات اس وقت رقم کے تعین کے طریقہ کار، اور ملزمان کے خلاف کیسز کا خاتمہ شامل ہے لیکن اونٹ کسی کروٹ نہیں بیٹھ رہا کیوں کے دونوں اطراف سے جو شرائط پیش کی جا رہی ہیں ان پر اتفاق نہیں ہو پا رہا۔ اس صورت حال میں نیب اپنی تحقیقات جاری رکھے ہوئے ہے۔

یہ بھی کہا جا رہا ہے کہ زین ملک نیب سے اسی طرح کی ڈیل کرنا چاہ رہے ہیں جیسی ملک ریاض نے مارچ 2019 کو سپریم کورٹ کے ساتھ ایک سیٹلمنٹ کی جس میں انھوں نے بحریہ ٹاؤن کراچی کی متنازع زمین کے بدلے حکومت پاکستان کو 460 ارب روپے دینے کی پیشکش کی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں