109

حکومت میں بیٹھا آٹا،چینی مافیا عوام کو لوٹ رہاہے

اسلام آباد،(بےلاگ نیوز)ترجمان مسلم لیگ (ن) مریم اورنگزیب نے حکومتی سبسڈی پیکج کو دن دیہاڑے ڈکیتی قرار دے دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق اپنے بیان میں پاکستان مسلم لیگ (ن) کی ترجمان مریم اورنگزیب نے کہا کہ عمران مافیا نے ملک میں چینی اور آٹا کی برآمد پر پابندی کے باوجود سبسڈی دے کر برآمد کی اور جان بوجھ کر قلت پیدا کی اب سبسڈی دینے کا اعلان کر کے عمران مافیا نے اپنی چوری کا پول کھول دیا ہے،شوگر ایڈوائزری بورڈ نے اٹھائیس جنوری کو پابندی کے لئے ای سی سی سے رجوع کرنے کا کہا تھا مگرعمران مافیا نے چینی کی ایکسپورٹ پر پابندی لگانے میں اتنا وقت جہانگیر ترین اور خسرو بختیار کی تجوریاں بھرنے کے لئے لگایا۔

مریم اورنگزیب کا کہنا تھا کہ اگر ملک میں چینی کی قلت نہیں تھی تو اکتیس جنوری کو تین لاکھ ٹن چینی درآمد کرنے کی حکومت نے منظوری کیوں دی؟حکومت کی جانب سے اسمگل اور ذخیرہ اندوزی کرنے والوں کے خلاف کوئی کارروائی نہیں ہوئی جبکہ ‏‎چینی اور آٹا باہر بیچ کرجیبیں بھرنے والوں نے حکومت سے سبسڈیز بھی لے لی،‏‎حکومت میں بیٹھا چینی اور آٹا مافیا ایک طرف عوام کو لوٹ رہا ہے تو دوسری طرف خزانے پرہاتھ صاف کررہا ہے۔

‏‎ مریم اورنگزیب کا کہنا تھا کہ درآمد پر پابندی کا مطلب مافیا ملک میں چینی کی موجودہ زیادہ قیمت ہی برقرار رکھنا چاہتا ہے،عمران صاحب نے غریبوں کو لوٹنے والے مافیا پر حکومتی خزانے کا منہ کھول دیا ہے ، سال دوہزار انیس میں جو ایکسپورٹ ہوئی اس پر حکومت نے چینی ملوں کو سبسڈی ادا کی ،مہنگائی کی اصل وجہ بجلی، گیس کے نرخ میں اضافہ اور ٹیکسوں کی بھرمار ہے،قوم کو ابھی تک نہیں بتایا کہ کس نے ذخیرہ اندوزی کی ، کس نے مال کمایا؟ کس نے کتنا آٹا اور چینی باہر بیچی ؟

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں