186

افغان مہاجرین کی واپسی کیلئے کس چیز کی ضرورت ہے،وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نےبتادیا

اسلام آباد،(بےلاگ نیوز)شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ مسائل کے باوجود لاکھوں مہاجرین کو سہولتیں مہیا کیں، مہاجرین کی واپسی کے روڈ میپ پر عالمی برادری سے مل کر کام کرنا چاہتے ہیں۔

اسلام آبادمیں افغام مہاجرین سے متعلق عالمی کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے کہاہے کہ مسائل کے باوجودلاکھوں مہاجرین کوسہولتیں مہیاکی ہیں۔ مہاجرین کواسلامی اقدارکے مطابق پناہ دی۔صحت اور تعلیم جیسی سہولیات فراہم کیں۔پاکستان نے 50 لاکھ مہاجرین کوپناہ دی۔تاہم ان کی واپسی اور بحالی کیلئے عالمی تعاون کی اشد ضرورت ہے۔

شاہ محمودقریشی نے کہاافغانستان میں امن اورمسائل کاحل ناگزیرہے،وہاں خانہ جنگی ابھی ختم نہیں ہوئی۔ پاکستان اورافغانستان کاتعلق مشترکہ مذہب ثقافت پرقائم ہے لیکن کوئی بھی ملک اس مسئلے سے اکیلے نہیں لڑسکتا۔ہم پرامن افغانستان کے حق میں ہیں،افغانوں کی سربراہی میں امن عمل کے حامی ہیں۔پاکستان مستحکم اور پرامن افغانستان کا خواہشمند ہے۔

انہوں نے کہا ہرمہاجرکی اس کانفرنس سے امیدیں وابستہ ہیں،افغان مہاجرین کی واپسی کیلئے روڈ میپ کی ضرورت ہے، ہم نے غیر قانونی طور پر مقیم دس لاکھ افغان مہاجرین کو رجسٹرڈ کیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں